الیکشن کمیشن نے میئر اسلام آباد شیخ انصر عزیز کے استعفے پر اعتراض لگا دیا

اسلام آباد (این این آئی)الیکشن کمیشن آف پاکستان نے میئر اسلام آباد شیخ انصر عزیز کے استعفے پر اعتراض لگا دیا۔ذرائع کے مطابق الیکشن کمیشن نے میئر اسلام آباد کو متعلقہ فورم سے رجوع کرنے کی ہدایت کر دی ہے، میئر اسلام آباد نے آئی سی ٹی ایکٹ کے برخلاف استعفیٰ بھجوایا ہے۔ذرائع الیکشن کمیشن نے بتایا کہ میئر اسلام آباد چیف کمشنر لوکل گورنمنٹ کو استعفیٰ ارسال کریں،وزارتِ داخلہ نوٹیفکیشن الیکشن کمیشن کو ارسال کرے گا۔ذرائع الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ میئر اسلام آباد نے استعفیٰ براہِ راست الیکشن کمیشن کو ارسال کیا تھا، قانون کے مطابق مئیر

کو چیف آفیسر لوکل گورنمنٹ کو استعفیٰ بھجوانا چاہیے تھا۔الیکشن کمیشن کے ذرائع کا کہنا ہے کہ چیف آفیسر لوکل گورنمنٹ وزارتِ داخلہ کو میئر کا استعفیٰ بھجواتا ہے، وزارتِ داخلہ استعفیٰ موصول ہونے کے بعد نوٹیفکیشن الیکشن کمیشن کو بھجواتا ہے۔اس سے قبل سابق میئر اسلام آباد شیخ انصر عزیز کا از خود تمام ڈائریکٹوریٹس وفاقی حکومت کے سپرد کرنے کا خط سامنے آگیا۔شیخ انصر عزیز نے خط کے ذریعے 4 ڈائریکٹوریٹس سی ڈی اے کو دینے کی تجویز دی ہے۔سابق میئر اسلام آباد نے 6 اکتوبر کو بھجوائے گئے اپنے استعفے پر یکم اکتوبر کی تاریخ درج کی ہے، ماحولیات، پانی، صفائی، انجینئرنگ کے ڈائریکٹوریٹس سی ڈی اے کو دیئے جائیں۔خط کے متن میں کہا گیا کہ سی ڈی اے، میٹرو پولیٹن کارپوریشن کے درمیان محکمانہ تقسیم سے عوام متاثر ہو رہے ہیں، وفاقی دارالحکومت میں صفائی، پانی، ماحولیات کے مسائل فنڈز نہ ملنے کی وجہ سے ہیں۔اسلام آباد کے سابق میئر شیخ انصر عزیز کا اپنے خط میں یہ بھی کہنا ہے کہ بار بار مطالبے کے باوجود فنڈز جاری نہیں کیئے گئے۔شیخ انصر عزیز نے وزیرِ اعظم عمران خان کو بھی خط میں فنڈز کی عدم دستیابی پر تحفظات سے آگاہ کیا ہے۔ادھر قومی احتساب بیورو (نیب) کی جانب سے وضاحت کی گئی ہے کہ شیخ انصر عزیز کو کسی انکوائری میں کلیئر نہیں کیا ہے۔نیب کا جاری کیئے گئے اعلامیے میں کہنا ہے کہ شیخ انصر کے خلاف نیب راولپنڈی میں اختیارات کے ناجائز استعمال اور مبینہ کرپشن کی تحقیقات قانون کے مطابق جاری ہیں۔

Leave a Reply

%d bloggers like this: