خیبر پختونخوا میں معروف ڈانسر کی وجہ سے 16 افراد قتل! ضلعی حکومت کا ڈانسر کے حوالے سے اہم فیصلہ

کوہاٹ(نیوز ڈیسک) محفل موسیقی میں اچانک میدانِ ج ن گ بن گیا، 16 افراد جان کی بازی ہار گئے، ق ت ل و غارت کے بعد معروف ڈانسر چاہت کو ضلع بدر کرنے کا فیصلہ کرلیا گیا ہے۔



تفصیلات کے مطابق مشیر سائنس و انفارمیشن ٹیکنالوجی خیبرپختونخوا ضیاء اللہ خان بنگش کی ڈپٹی کمشنر کوہاٹ اور ڈی پی او کوہاٹ کو کوہاٹ کے علاقے کاغذی میں شادی کے موسیقی پروگرام میں فائرنگ کے پیش آنے والے افسوس ناک واقعہ کی تحقیقات کرنے اور ذمہ داران کے خلاف کاروائی کی ہدایت کی ہے۔


گزشتہ روز کوہاٹ کے علاقہ کاغزئی میں شادی کی تقریب میں پیش آنے والے افسوس ناک واقعہ میں 5 افراد ج اں بح ق ہوئے تھے۔


ضیاء اللہ بنگش واقعے میں جاں بح ق ہونے والے افراد کے لواحقین سے تعزیت کے لیے ان کے گھر پہنچے۔اس موقع پر علاقہ عمائدین مشران نے معروف ڈانسر چاہت اور اس کے ساتھیوں کے خلاف بھی کاروائی کا مطالبہ کر دیا ۔

جس کی وجہ سے شادی کی اس تقریب میں قیمتی جانوں کا ضیاع ہوا۔مشیر سائنس و انفارمیشن ٹیکنالوجی ضیاء اللہ خان بنگش کی ضلعی اور پولیس انتظامیہ کو اس معاملے میں ملوث ہونے پر چاہت اور ان کے ساتھیوں کے خلاف قانونی کاروائی کرنے اور معاملے میں ملوث ہونے پر مینٹینینس آف پبلک آرڈر کے تحت ضلع بدر کرنے کی ہدایت کی۔


انہوں نے کہ اکہ کوہاٹ کے امن و امان کو خراب کرنے والے عناصر کے خلاف کاروائی کی جائےگی۔ اس سے قبل بھی معروف ڈانسر چاہت کی وجہ سے 16 جانیں ضائع ہوئیں جس کی تحقیقات کی جائیں گی۔


انہوں ںے کہا کہ آج کوہاٹ دورے کے دوران کوہاٹ کے معززین اور مشران نے مطالبہ کیا ہے ضلع میں اس قسم کے پروگرامات جن میں غیرقانونی سرگرمیاں ہوں پر مکمل پابندی عائد کی جائے جس کی وجہ سے کوہاٹ کا امن و امان اور نوجوان متاثر ہو رہے ہیں۔



%d bloggers like this: