سینئر قانون دان اعتزاز احسن فیک اکاؤنٹس کا مسئلہ لے کر سینیٹ کی قائمہ کمیٹی میں پہنچ گئے

سینئر قانون دان اعتزاز احسن فیک اکاؤنٹس کا مسئلہ لے کر سینیٹ کی قائمہ کمیٹی میں پہنچ گئے

قائمہ کمیٹی برائے امور داخلہ اجلاس، اعتزاز احسن کی سوشل میڈیا پر ان سے منسوب اکاؤنٹس بارے دہائی

پیپلز پارٹی کے رہنما رحمان ملک کی زیرصدارت پارلیمنٹ کی قائمہ کمیٹی برائے امور خارجہ کا اجلاس ہوا، جس میں اعتزاز احسن ایک سائل بن کر پیش ہوئے اور کمیٹی کے سامنے دہائی دیتے ہوئے کہا کہ سوشل میڈیا پر میرے نام سے منسوب بہت سے اکاؤنٹس چل رہے ہیں جو مجھ سے منسوب کرکے جعلی خبریں پھیلا رہے ہیں۔

عدیل وڑائچ کے مطابق اعتزاز احسن تین سال قبل سینٹ سے ریٹائر ہو چکے ہیں اور تین سال کے بعد وہ سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے امور خارجہ میں پیش ہوئے اور انہوں نے قائمہ کمیٹی برائے امور خارجہ کے اجلاس میں اپنا دکھڑا سنایا جس کے لیے انہوں نے مختلف اداروں سے مدد بھی مانگی ہے۔

اعتزاز احسن کا قائمہ کمیٹی کے اجلاس میں کہنا تھا کہ معاملہ کچھ یوں ہے کہ واٹس ایپ اور ٹوئٹر پر میرے نام کے جعلی اکاؤنٹ بنے ہوئے ہیں اور جو میں سیاسی اور معاشی اعتبار سے نہیں کہنا چاہتا وہ سب مجھ سے منسوب کرکے ٹوئٹر پر کہا جا رہا ہوتا ہے، جس کی نہ تو زبان میری ہوتی ہے اور نہ ہی الفاظ، میرا لہجہ ہمیشہ پارلیمانی ہوتا ہے، لیکن اس میں غیر پارلیمانی لہجہ اور مواد ڈال کر میری تصویر لگا کر سوشل میڈیا پر شیئر کر دیا جاتا ہے۔

اعتزاز احسن کا کہنا تھا کہ مذکورہ معاملے پر میری ایف آئی اے کے ڈائریکٹر جنرل سے بات بھی ہوئی تھی اور یہ بات 2019 کی ہے، 2019 میں یہ دیکھ رہا ہوں کہ انہوں نے میری درخواست پر کوئی انویسٹیگیشن نہیں کروائی، رابطہ کرنے پر انہوں نے کہا کہ جن لوگوں نے جعلی اکاؤنٹس بنا رکھے ہیں ہم انہیں ٹریس نہیں کر پا رہے۔

انہوں نے بتایا کہ ٹویٹر پر میرے نام سے منسوب دو اکاؤنٹس موجود ہیں، جن میں سے ایک کا نام پی پی اعتزاز احسن اور دوسرے کا نام ایڈووکیٹ اعتزاز احسن ہے، اگر میرے بیٹے نے مجھے کہا کہ آپ اپنا ذاتی اکاؤنٹ بنا کر اپنی تشہیر کر کے بتا دیں کہ آپ کا اکاؤنٹ کون سا ہے، لیکن وہ لوگ پھر بھی باز نہیں آ رہے، کیونکہ لوگ یہ چیز نہیں دیکھتے کہ اکاؤنٹ اصلی ہے یا نقلی؟ بس تصویر کو ہی دیکھتے ہیں۔

اعتزاز احسن کا رحمان ملک شکریہ ادا کرتے ہوئے کہنا تھا کہ جس طرح سے آپ نے پہلے میری درخواست پر ایکشن لیا تھا اس پر میں آپ کا بے حد مشکور ہوں، لہذا آپ میری امداد کی جائے، جس پر رحمٰن ملک نے کہا کہ میں وضاحت کرنا چاہتا ہوں کہ آپ کا مسئلہ دو کمیٹیوں میں ڈیل ہوتا ہے، ایک آئی ٹی میں وہ دوسرا اس کمیٹی میں، جس پر میں پہلے ہی ایکشن لے چکا ہوں۔

سینیٹر رحمان ملک کا کہنا تھا کہ جب میں نے آپ کا معاملہ چیئرمین پی ٹی اے جنرل عامر کے سامنے اٹھایا تو انہوں نے اپنی مجبوری یہ بتائی کہ جب ہم فیس بک یا ٹویٹر کو لکھتے ہیں تو وہ ہمارے ساتھ کوپریٹ نہیں کرتے، جس طرح سے ہم نے ہمارے دور میں یوٹیوب کو بند کیا تھا اگر اس طرح سے جناب کے لیے ٹوئٹر کو بند کر دیا جائے تو ہو سکتا ہے کہ مسئلہ حل ہو جائے۔

مجھے یہ بات آپ کو بتاتے ہوئے خوشی ہو رہی ہے کہ ٹوئٹر نے ہمارے ساتھ کوپریٹ کرنا شروع کر دیا ہے اور ٹویٹر انتظامیہ نے آپ کے نام سے منسوب دونوں جعلی اکاؤنٹ بند کر دیئے ہیں۔

The post سینئر قانون دان اعتزاز احسن فیک اکاؤنٹس کا مسئلہ لے کر سینیٹ کی قائمہ کمیٹی میں پہنچ گئے appeared first on Siasat.pk Urdu News – Latest Pakistani News around the clock.

%d bloggers like this: