مسکان شیخ سمیت 4 ٹک ٹاکرز کے قتل سے متعلق مزید تفصیلات سامنے آگئیں

کراچی میں  ساڑھے پانچ لاکھ فالورز رکھنے والی  مسکان شیخ سمیت 4  ٹک ٹاک ویڈیو ز بنانے والے نوجوانوں کے قتل سے متعلق مزید تفصیلات منظر عام پر آگئیں ہیں۔

سیاست ڈاٹ پی سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے  سینئر رپورٹر شاہد  ثقلین کا کہنا تھا کہ یہ واقعہ سب سے پہلے سوشل میڈیا پر  اٹھایا گیا جسے بعد میں ٹی وی پر بھی چلایا گیا،  یہ واردات کراچی میں صبح  پانچ ساڑھے پانچ   بجے کے درمیان ہوئی۔

واقعے کے بعد  پولیس کی کچھ ویڈیوز سامنے آئیں جن میں پولیس کی غیر ذمہ داری بھی عوام کے سامنے واضح ہوئی، ہلاک شدگان کی شناخت مسکان شیخ، عامر، ریحان اور صدام کے ناموں سے ہوئی ، یہ چاروں آپس میں دوست بھی تھے اور ایک ساتھ ٹک ٹاک ویڈیوز بنایا کرتے تھے۔

شاہد ثقلین کے مطابق ہلاک ہونے والی مسکان شیخ ایک بچے کی ماں تھی اور انہوں نے اپنے شوہر سے طلاق لی ہوئی تھی، مسکان کے والدین نے ٹک ٹاک ویڈیوز اور دوستوں کے ساتھ میل جول کی وجہ  سے ان سے تعلق بھی توڑ رکھے تھے جس کے بعد مسکان لانڈھی کے علاقے میں رہائش پزیر تھیں، موت کے بعد بھی اس کے والدین نے میت کو وصول کرنے سے بھی انکار کردیا تھا، اور بہت کہے جانے کے بعد عشاء کی نماز کے بعد مسکان کی میت وصول کی گئی۔

واردات کی رات  دوستوں نے  مسکان کو گھر سے پک کیا اور اپنی روٹین کے مطابق ایک ہوٹل پر پہنچے جہاں انہوں نے کھانا کھایا اور  پانچ ساڑھے پانچ بجے واپس آرہے تھے جب انہیں صدر میں انکل سریا ہسپتال کے پاس ان کی گاڑی کو روک کر فائرنگ کردی گئی، مسکان  کو گاڑی کے اندر دو گولیاں لگیں جبکہ ان کے دوست عامر کو گاڑی کے باہر گولیاں مار کر ہلاک کیا گیا۔

شاہد ثقلین کا کہنا تھا کہ باقی کے دو لوگوں نے جان بچانے کیلئے انکل سریا ہسپتال کی طرف دوڑ لگادی ، پولیس کے مطابق ایک کو ہسپتال کے باہر جب کے دوسرے کو ہسپتال کے دروازے کے اندر گولیاں مار کر ہلاک کردیا گیا ، واقعے کے بعد پولیس نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر تحقیقات کا آغاز کیا۔

شاہد ثقلین کے مطابق واقعے کے بعد بہت سی افواہیں  سامنے آئیں جن میں کہا گیا کہ  پیسوں کے لین دین ، نشے کے کاروبار ،  2 لڑکوں کا کرمنل ریکارڈ بھی نکل آیا ، یہ سب افواہیں  گردش کرنے لگیں جس پر پولیس نے بھی تحقیقات شروع کی ہوئی ہیں، واقعے میں 2 لوگ مرکزی ملزمان کا نام لیا جارہا ہے  ایک ٹک ٹاکر کا نام رحمان   جبکہ دوسرے کا نام قیصر تنولی ہے۔

شاہد ثقلین کا مزید کہنا تھا کہ تحقیقات سے پتا چلا ہے کہ قتل کرنے والا رحمان اور مسکان آپس میں دوست تھے اور کہا جارہا ہے کہ دونوں نے مبینہ طور پر شادی بھی کی ہوئی تھی، قتل کے دن تک مسکان اور رحمان رابطے میں بھی تھے، تاہم کہا جارہا ہے کہ رحمان کے ساتھ رنجش کے بعد اس کے عامر کو دوست بنایا، عامر کی دوست سویرا سے رحمان نے بدلے کی غرض سے دوستی کی، کچھ دن پہلے مسکان اور سویرا کے درمیان لڑائی ہوئی۔

شاہد ثقلین کا کہنا تھا کہ پولیس نے  اب تک جو تحقیقات کی ہیں اس کے بعد اس لڑائی کے بعد رحما ن نے ان چاروں کو قتل کیا کیونکہ اس وقت کی رحمان کی موبائل لوکیشن بھی جائے واردات کی ہے نظر آرہی ہے، رحمان   واردات کے دن سے مفرور ہے  اسی وجہ سے پولیس کا شک بھی مضبوط ہورہا ہے، پولیس  تلاش اور گرفتاری کیلئے چھاپے مار رہی ہے مگر ابھی تک کوئی کامیابی حاصل نہیں ہوسکی ہے۔

The post مسکان شیخ سمیت 4 ٹک ٹاکرز کے قتل سے متعلق مزید تفصیلات سامنے آگئیں appeared first on Siasat.pk Urdu News – Latest Pakistani News around the clock.

%d bloggers like this: