نون لیگ پر پابندی لگنی چاہیئے اور یہ پابندی لگ بھی سکتی ہے: شیخ رشید کے اشارے

 

لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے شیخ رشید نے کہا کہ (ن) لیگ پاکستان دشمنوں کے ایجنڈے پر کام کرے گی تو اس پر پابندی لگ سکتی ہے اور لگنی چاہیے۔

وزیر ریلوے نے دعویٰ کیا کہ 6 سے 15 فروری تک مسلم لیگ (ن) کے لوگ انہیں چھوڑ کر چلے جائیں گے، ن لیگ ٹوٹ رہی ہے  اور 27  دسمبر ان کے جلسوں کی آخری تاریخ ہے۔

لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے شیخ رشید نے کہا کہ جب دو ملاقاتوں کا ذکر کیا تو بہت سارے مسائل سے گزرنا پڑا اور دو ملاقاتوں کا ذکر کیا تو طوفان آئے گا۔

شیخ رشید نے کہا کہ گزشتہ روز کے جلسے میں نوازشریف کی تقریر نہیں سن سکا سوگیا تھا، کورونا کے بعد 6 ماہ صحت مند ہونے میں لگتے ہیں، آج کل طبیعت ٹھیک نہیں دواکھا رہا ہوں۔

وزیر ریلوے کا کہنا تھاکہ نواز شریف کی سیاست ختم ہوچکی ہے، بھارت میں بانی ایم کیو ایم کو وہ کوریج نہیں ملی جو کل نواز شریف کو ملی، لندن سے نوازشریف کا سیاسی جنازہ آئے گا، اگر نواز شریف کی یہی پالیسی رہی تو یہ نہ ہو کہ عمران خان اگلے پانچ سال بھی لگالے۔

شیخ رشید نے مزید کہا کہ نوازشریف وہ کھیل کھیل رہے ہیں جو عالمی ایجنڈا ہے، انہیں اندازہ ہی نہیں یہ کیا کھیل کھیل رہے ہیں، نوازشریف بانی ایم کیو ایم ٹو بن گئے ہیں، اعلانِ جنگ ہوچکا ہے، طبلِ جنگ بج چکا، نوازشریف کے ساتھ وہی ہوگا جو الطاف حسین کے ساتھ ہوا ہے۔

%d bloggers like this: