نیب بیوروکریسی کے کام میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے، سلیم مانڈوی والا نیب کے پیچھے ہی پڑ گئے

سکھر (این این آئی)ڈپٹی چیئرمین سینیٹ سلیم مانڈوی والا نے کہا ہے کہ قومی احتساب بیورو (نیب) اس وقت بیوروکریسی کے کام میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جب تک نیب اپنا طریقہ کار بہتر نہیں کرے گا، پریشان کرنا بندنہیں کرے گا اس وقت تک بیوروکریسی اپنا کام ٹھیک طریقے سے نہیں کرسکے گی۔انہوں نے کہا کہ ملک میں ایسا کوئی ادارہ نہیں ہے جسے پارلیمنٹ بلائے اور وہ نہ آئے۔سلیم مانڈوی والا نے امید ظاہر کی کہ اس لیے مجھے کوئی شبہ نہیں ہے کہ چیئرمین قومی احتساب بیورو

(نیب) یا ان کے افسران پارلیمنٹ یا اس کی کمیٹی میں پیش نہیں ہوں گے۔ان کا کہنا تھا کہ جب پارلیمنٹرین الیکشن کمیشن اور فیڈرل بورڈ آف ریونیو(ایف بی آر) میں جوابدہ ہیں اور اپنے اثاثے ان کے سامنے ڈکلیئر کرتے ہیں تو اگر نیب میں کام کرنے والوں کے اثاثے، ڈگریاں اور ڈومیسائیل چیک کیے جا رہے ہیں تو اس میں کیا قباحت ہے۔ انہوں نے کہا کہ اداروں کی نگرانی کرنا پارلیمنٹ کا کام ہے اور اگر وہ اس وقت نیب کی نگرانی کررہی ہے تو یہ بات لوگوں کو انہونی کیوں لگ رہی ہے۔ڈپٹی چیئرمین سینیٹ نے کہاکہ میرا کیس کورٹ میں ہے اور میں وہاں پر اپنا جواب جمع کرؤں گا اور مجھے امید کورٹ ہی بہتر فیصلہ کرے گی،سینٹ کے انتخابات مقررہ وقت پر ہی ہوں گے، اس سے پہلے انتخابات نہیں ہوسکتے۔

Leave a Reply

%d bloggers like this: