پی ڈی ایم کی جماعتیں اپنے ایجنڈے پر متفق ہیں ،مولانا فضل الرحمان

پشاور: جمعیت علمائے اسلام کے مرکزی قائد مولانا فضل الرحمان نے کہاہے کہ پی ڈی ایم کی جماعتیں اپنے ایجنڈے پر متفق ہیں ،حکمرانوں کے غیر سنجیدہ اقدامات اور نااہلی کی وجہ سے ملک معاشی ابتری کا شکار ہے، حکومت کو مزید ملک پر مسلط کرنا ملکی استحکام کے لئے خطرناک ثابت ہوسکتا ہے ،دسمبر تک حکومت کو نہیں دیکھ رہا، اپوزیشن کی کاوشیں کامیابی کے قریب ہیں ۔

ان خیالات کا اظہار جمعیت علمائے اسلام کے مرکزی قائد مولانا فضل الرحمان نے مفتی محمود مرکز پشاور میں صوبائی عاملہ کے اراکین سے بات چیت کرتے ہوئے کیا ۔اس موقع پر صوبائی جنرل سیکرٹری مولانا عطاء الحق درویش شمس الرحمن شمسی عبدالجلیل جان مولانا احمد علی درویش اور دیگر ارکان بھی موجود تھے ۔

مولانا فضل الرحمان صاحب نے کہا کہ اپوزیشن کی تمام جماعتیں 25 جولائی 2019 کے دھاندلی زدہ انتخابات کے حوالے سے اپنے بیانئے ہر قائم ہیں۔ سلیکٹیڈ حکمران مرکز اور خیبر پختونخوا میں نہ صرف عوام کو ریلیف دینے میں ناکام رہے بلکہ ملکی معیشت کا بیڑہ بھی غرق کردیا۔

انہوں نے کہا کہ گوجرانولہ کراچی اور کو ئٹہ کے بعد پشاور جلسہ حکمرانوں کے خلاف ریفرنڈم ثابت ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت عوامی جلسوں سے خائف ہوچکی ہے سلیکٹیڈ وزیراعظم اور حکومتی ترجمان اپنی کارکردگی پر پردہ ڈالنے کے لیے آئے روز اپوزیشن کی کردار کشی میں مصروف ہے آج ملک بھرمیں عوام اور سرکاری ملازمین حکومت کے خلاف احتجاج کرنے پر مجبور ہیں.

انہوں نے کہا کہ پی ڈی ایم ملک کو بچانے، آئین کے استحکام قانون و اداروں کی بالادستی اور ملک وعوام کو موجودہ حکومت سے نجات دلانے کے لیے میدان میں اتر چکی ہے اور تمام اپوزیشن جماعتوں پروپیگنڈوں کے باوجود مشترکہ بیانیے پر قائم ہیں انہوں نے کہا کہ سلیکٹیڈ حکمرانوں کا زوال قریب ہے جنوری سے قبل ان شاء اللہ عوام کا غیض و غضب حکمرانوں کو گھر بھیجنے پر مجبور کردیگا۔۔

%d bloggers like this: