گزشتہ سماعت میں حمزہ شہباز کی عدم پیشی پر عدالت برہم ، اس کا ذمے دار کون ہے؟

لاہور کی احتساب عدالت میں رمضان شوگر ملز کیس پر سماعت ہوئی، کیس کی سماعت احتساب عدالت کے جج امجد نذیر چودھری نے کی، معزز جج نے جیل سپرنٹنڈنٹ سے سوال کیا کہ گزشتہ سماعت پر جوڈیشل حراست میں ملزم کو عدالت پیش نہیں کیا گیا۔

جیل سپرنٹنڈنٹ نے جواب دیا کہ ہم ڈسٹرکٹ پولیس لائن میں ملزمان کی فہرست دیتے ہیں، عدالت میں پیش کرنے کا اسکواڈ پولیس لائن سے جاتا ہے۔

عدالت نے سوال کیا کہ تاریخ میں کبھی ایسا ہوا ہے کہ زیرِحراست ملزم خود پیش نہ ہو، اس کا ذمے دار کون ہے؟ جس پر ایس پی ہیڈکوارٹرز نے عدالت کو بتایا کہ حمزہ شہباز اس کے ذمے دار ہیں، وہ بکتر بند گاڑی دیکھ کر واپس چلے گئے تھے۔

ایس پی ہیڈکوارٹرز کے جواب پر عدالت نے کہا کہ یہ کیا بات ہوئی؟ گزشتہ سماعت سے دنیا کو یہ بتایا گیا کہ ایک ملزم کے سامنے ہماری ریاست ناکام ہو گئی ہے ریاست کو عالمی سطح پر بدنام کیا گیا۔

حمزہ شہباز نے کہا کہ میں عدالت سے کچھ کہنا چاہتا ہوں۔ جج نے حمزہ شہباز کو جواب دیا کہ آپ کی بات بھی سُنتا ہوں، آپ کیا کہنا چاہتے ہو؟

حمزہ شہباز نے احتساب عدالت کو بتایا کہ میں 17 ماہ سے عدالتوں میں پیش ہو رہا ہوں، سب کو علم ہے کہ میری کمر میں شدید تکلیف ہے، میں گاڑی کے لیے ڈھائی گھنٹے انتظار کرتا رہا، پولیس والوں کو کہا کہ گاڑی تبدیل کر لیں اور عدالت لے چلیں۔ 17 ماہ تک مجھے بلٹ پروف گاڑی میں لایا جاتا رہا ہے، اس روز اچانک سے بکتر بند گاڑی لے آئے۔

جج نے سوال کیا کہ کسی ملزم کو جیل میں لانے کیلئے کوئی قانون یا ایس او پیز ہیں؟
ایڈیشنل سیکریٹری نے جواب دیا کہ ایسا کوئی قانون یا ایس او پیز نہیں۔ عدالت نے حکم دیا کہ عدالتوں میں پیش ہونے والے تمام ملزمان کی پیشی کیلئے ایس او پیز بنائے جائیں جس کے بعد سماعت 17 نومبر تک ملتوی کر دی گئی۔

The post گزشتہ سماعت میں حمزہ شہباز کی عدم پیشی پر عدالت برہم ، اس کا ذمے دار کون ہے؟ appeared first on Siasat.pk Urdu News – Latest Pakistani News around the clock.

%d bloggers like this: